Urdu Novel Kay Iqtibas

Iqtabas From Urdu Novels - Khoobsurat Iqtibas - Urdu Thoughts - urdu novel quotes images - iqtibas in urdu - best urdu novel lines about love - urdu novel quotes facebook - best lines in urdu - urdu novels pinterest - sad novel quotes in urdu


پچھلے دو ہفتوں میں اس کے نام یہ تیسری چٹھی آ رہی تھی ۔ اور وہ حیران تھی کون پاگل پچھلی صدی سے اٹھ کے آگیا ہے جو فون ، ٹیکسٹ میسجز یا میل کو چھوڑ کر ابھی بھی خطوں کے سہارے جی رہا ہے ۔
اور یہ مکمل خط بھی تو نہیں ہوتے تھے
کسی رجسٹر یا کاپی سے پھاڑے ہوۓ صفحات ہوتے جو خط کے مخصوص لفافے میں اسے ملتے ۔
آج بھی نامہ بر اسے یہ تیسرا خط تھما گیا تھا اور خط وصول کرتے ہوۓ آج پہلے خط کی وصولی والے حیران کن تاثرات نے بھی چہرے کا احاطہ نہیں کیا نہ ہی بیلا کا البیلا دل بے طرح سے اور بے ترتیبی سے دھڑکا آج وہ یوں مطمٸن تھی جیسے خطوط کا یہ سلسلہ پچھلے کٸی سالوں سے چلتا آ رہا ہو
” اے سردیوں کی دھوپ سی من کو بھانے والی بے حد حسین لڑکی ۔۔۔ یقیناً تم بالکل خیریت سے ہوگی کیونکہ میں بھی بخیریت ہوں ۔ “
ابتدائی سطور پڑھتے ہی بیلا کے لبوں پر مسکراہٹ در آٸی ۔ سر اٹھا کے اوپر پورے جہان پر پھیلی سردیوں کی نرم گرم دھوپ کو دیکھا ” یہ تو زیادہ سنہری اور اجلی ہے “ اور پھر سے مسکرا کر دوبارہ سر جھکا لیا ۔ ۔ ۔
” تمہیں دُور بہت دُور سے فاصلہ بنا کے اپنے کام میں مگن دیکھنا بہت اچھا لگتا ہے اور یہ وہ واحد کام ہے جس کیلیے میرا دل مجھے زبردستی پارک میں کھینچ لاتا ہے جہاں تم سب سکیچنگ کی کلاسز لیتے ہو ۔ تم سے بات کر کے حاصل ہونے والی خوشی سے ابھی ناواقف ہوں یقیناً اگر میں تب اپنے حواسوں پر قابو اور بصارتوں پر یقین کر پایا تو وہ لمحہ میری زندگی کا خوبصورت ترین اور یادگار ترین ہوگا ۔۔۔
جلدی سے وہ چند لمحے مجھے دے دو تاکہ میں ان چند لمحوں کو اپنی زیست کی پیشانی پر جھومر سا ٹانک سکوں “
ناول : #من_رقصم سے اقتباس
مصنف : #ارش


Post a Comment

0 Comments