May 29, 2021

Repentance is Not About Being Ashamed - توبہ یہ نہیں ہے کہ اپنے گناہوں

 Repentance is not about being so ashamed of your sins that you run away from it. Repentance is the act of asking forgiveness for a sin and making a vow never to do it again. So how do you remember the mistakes you made? Repentance and correction is the name of finding the cause of one's sin. Why did I do that? Why did I cheat? If I fell in love with the wrong person, what was it about him that got me into his trap?

توبہ یہ نہیں ہے کہ اپنے گناہوں پہ اتنی شرمندگی ہو کہ اس سے منہ چھپا کے بھاگ جائیں۔ توبہ اس گناہ کی معافی مانگنے اور دوبارہ نہ کرنے کا عہد کرنے کا نام ہے۔انسان دوبارہ وہی کام کرنے سے خود کو بچاتا ہے جس کو پہلی دفعہ کرنے پہ نقصان اٹھانے کی ”وجہ“ اس کو یاد ہو۔اگر آپ اپنے ماضی کو بھلانے کی کوشش کریں گے.تو آپ کو کیسے یاد رہیں گی وہ غلطیاں جو آپ نے کی تھیں؟ 

توبہ  اور اصلاح اپنے گناہ کی وجہ ڈھونڈنے کا نام ہے۔میں نے وہ کیا تو کیوں کیا؟ میں نے دھوکہ کھایا تو کیوں کھایا؟ میں غلط شخص کی محبت میں پڑا تو اس کی کون سی ایسی بات ہے جو مجھے اس کے پھندے میں پھانستی گئی تھی؟

یہ باتیں بھلادینے کی نہیں‘ یاد رکھنے کی ہوتی ہیں۔ کیوں؟

کیونکہ تاریخ خود کو دہراتی ہے۔جو غلط کام آپ سے پہلے ہوئے ہیں‘ ان کے مواقع دوبارہ آئیں گے۔ شاید ابھی آپ کو اس بات پہ یقین نہ آئے لیکن اپنی جس پرانی غلطی پہ آپ کو شرمندگی تھی‘ وہ زندگی کے کسی موڑ پہ آپ کو کسی دوسری شکل میں ترغیب دلائے گی۔جس شخص نے آپ کو دھوکہ دیا تھا‘  ویسا ہی ایک شخص بعد میں بھی آپ کو ملے گا۔کئی ماہ‘ کئی سال‘ کئی دہائیوں بعد سہی لیکن ملے گا۔اگریہ یاد نہ رہے کہ اس کی کیا بات آپ کو اس کے جال میں پھنسا دیتی تھی‘  تو اس نئے وار سے کیسے بچ پائیں گے؟

ماضی کو بھلادینا غلط ہے۔ماضی سے سیکھنا اصل آرٹ ہے۔اور ماضی کی غلطیوں سے سیکھنے کے لیے پہلے ان غلطیوں کی ذمہ داری قبول کرنی پڑتی ہے


میں انمول

Post a Comment